Dastan Lab-O-Ruksar Sa Agay Na Barho || Love Poetry


Love Poetry



داستان لب و رخسار سے آگے نہ بڑھو

حکم ہے کوچہ دلدار سے آگے نہ بڑھو


Dastan Lab-O-Ruksar Sa Agay Na Barho

Hukam Ha Kocha Dildar Sa Agay Na Barho


ادا جعفری